28

قومی اسمبلی کے ایجنڈے سے تحفظ ناموس رسالتﷺ کی قرارداد کو نکال دیا گیا، احسن اقبال

قومی اسمبلی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں احسن اقبال کا کہنا تھاکہ حکومت نے اجلاس ملتوی کرکے راہ فرار اختیار کی۔ان کا کہنا تھاکہ ناموس رسالتﷺ کی قرارداد کے بجائے وقفہ سوالات کو موقع دے کر ہمارے اور قوم کے جذبات سے کھیلا گیا۔
جمعیت علمائے اسلام کے مولانا اسعد محمود کا کہنا تھاکہ حکومت نے بین الاقوامی میڈیا کے سامنے کہا کہ یہ حکومتی پالیسی نہیں پرائیوٹ ممبر کی قرارداد ہے، وزیراعظم دنیا کو دھوکا دے رہے ہیں یا قوم کو؟ پیپلزپارٹی کے راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ آج قومی اسمبلی کے اجلاس میں ہم یہ جاننا چاہتے تھے کہ حکومت نے پہلے ٹی ایل پی سے جو معاہدہ کیا، اس پر عملدر آمد کیوں نہیں کیا گیا؟

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں